اسٹیٹ بینک نے افغان مہاجرین کواکاؤنٹ کھولنے کی اجازت دیدی

0

رپورٹ ۔۔۔ میر ہزار خان بلوچ

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بینکوں ،ترقیاتی مالیاتی اداروں کو بذریعہ سرکلر ہدایت کی ہے کہ وہ افغان مہاجرین کے بینک اکاؤنٹ کھولنے کیلئے نادرا ( نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی ) کے جاری کردہ رجسٹریشن کارڈ ( پی او آر ) کو شناختی کارڈ دستاویز کے طور پر قبول کرسکتے ہیں

26فروری 2019سے نادرا نے رجسٹریشن کارڈ رکھنے والے افغان مہاجرین کی بائیو میٹرک توثیق کو سی این آئی سی توثیق کے موجودہ لنک سے لائیو کردیا ہے

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,770

رجسٹریشن کارڈ ( پی او آر ) رکھنے والے افغان مہاجرین کیلئے بائیومیٹرک توثیقی سروس اسی انداز میں کام کریگی جیسے سی این آئی سی بائیو میٹرک توثیقی نظام کرتا ہے ۔بینک ترقیاتی مالی ادارے اکاؤنٹ کھولنے کے حوالے سے افغان مہاجرین کی شناخت کی توثیق ،نادرا کے بائیو میٹرک توثیقی نظام سے کرینگے

بینکوں کی جانب سے اپنے کھاتے داروں کوخدمات کی پیشکش کیلئے جہاں اے ایل ایم /سی ایف ٹی کے تحت کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ اور بائیو میٹرک توثیق درکار ہوتی ہے وہاں بائیو میٹرک سے توثیق شدہ رجسٹریشن کارڈ ،شناختی کارڈ دستاویز کے طور پر قابل قبول ہے ۔

بینکوں ،ترقیاتی مالی اداروں سے بھی کہا گیا ہے کہ وہ اکاؤنٹ کھولنے کیلئے اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری ہونیوالی ہدایات میں اے ایل ایم ،سی ایف ٹی سمیت تمام متعلقہ قانونی اور ضوابطی شرائط پر عمل درآمد یقینی بنائیں

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.