کیپ ٹاؤن پچ ،پاکستان کیلئے خطرناک ،پروٹیز پرمہربان

0

اسپورٹس ڈیسک

جنوبی افریقی پیسرز نے حریف ٹاپ اورمڈل آرڈر کو بے بسی کی تصویر بنادیا نصف ٹیم لنچ سے قبل ہی ڈھیر ہوگئی ،صرف 177کا مجموعہ حاصل کیا جاسکا

کیپ ٹاون ٹیسٹ، پہلے روز کے کھیل کے اختتام پر جنوبی افریقہ کی پوزیشن مضبوط

کیپ ٹاؤن ٹیسٹ میں جنوبی افریقی کپتان فاف ڈوپلیسی نے ٹاس جیت کر پہلے سرفراز الیون کو بیٹنگ کی دعوت دی تو فخر زمان اور امام الحق نے اننگز کا آغاز کیا۔

اوپننگ بلے بازوں نے ایک مرتبہ پھر مایوس کن آغاز کیا اور صرف 9 کے مجموعی سکور پر فخر زمان1اور پھر 13 کے مجموعے پر امام الحق8رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے

فخر زمان ڈیل سٹین اور امام الحق فلینڈر کا شکار بنے۔تیسرے آؤٹ ہونے والے تجربہ کار بیٹسمین اظہر علی تھے جو اولیویئر کی باؤنسی گیند پر سلپ پر کھڑے ہاشم آملہ کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے،

اسد شفیق20رنز بناکر ربادا کی گیند پر ایلگر کے ہاتھوں کیچ ا آؤٹ ہوئے،بابرا عظم بھی ناکام رہے اور2رنز بنا کر اولیور کا دوسرا شکا ر بنے ،54 رنز پر پاکستان کی آدھی ٹیم پویلین لوٹ چکی تھی

جس کے بعد کپتان سرفراز اور شان مسعود نے چھٹی وکٹ کی پارٹنرشپ میں60رنز جوڑ ے ، شان مسعود 44رنز بناکر پویلین لوٹ گئے

کپتان سرفراز احمد نے اپنے کیریئر کی17ویں نصف سنچری مکمل کرنے کے ساتھ ساتھ محمد عامر کے ساتھ ملکر ساتویں وکٹ کے لیے42رنز کا اضافہ کیا

جس کے بعد سرفراز احمد56رنز بنا کر اولیور کی تیسری وکٹ بن گئے ، یاسر شاہ5رنز بنا کر اولیور کی چوتھی وکٹ بن گئے ،شاہین آفریدی آؤٹ ہونے والے آخری بلے باز تھے ،

جنوبی افریقہ کے لیے اولیور نے4،سٹین نے3،ربادا نے2اور فلینڈر نے ایک وکٹ لی۔

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,730

اس سے قبل تین ٹیسٹ میچز کی سیریز کے دوسرے مقابلے میں جنوبی افریقہ نے پاکستان کے خلاف ٹاس جیت کر پہلے باؤلنگ کرنیکا فیصلہ کیا

کپتان سرفراز احمد کا ٹاس ہارنے کے بعد کہنا تھا کہ اگر وہ ٹاس جیتنے میں کامیاب ہوتے تو پہلے بیٹنگ ہی کرتے۔

پہلے ٹیسٹ میں بیٹنگ لائن کی غیر ذمے دارانہ کارکردگی کے باوجود پاکستانی ٹیم دوسرے ٹیسٹ میں اپنی بیٹنگ لائن کو ایک اور موقع دیا،

سیریز میں واپس آنے کیلئے پاکستان کو اپنے سب سے مستند فاسٹ باؤلر محمد عباس کی خدمات حاصل ہیں جو حسن علی کی جگہ ٹیم میں واپس آئے ہیں ، پاکستان لیگ سپنر یاسر شاہ کو ٹرمپ کارڈ کے طور پر کھلائیگا

جنوبی افریقی ٹیم میں سپنر کیشو مہاراج کی جگہ فاسٹ باؤلر ورنن فلینڈر کی واپسی ہوئی ہے۔

پاکستانی ٹیم کپتان سرفراز احمد، فخر زمان، امام الحق، شان مسعود، اظہر علی، اسد شفیق، بابر اعظم، محمد عامر، یاسر شاہ،محمد عباس اور شاہین شاہ آفریدی پر مشتمل ہے۔

پاکستان ٹیم اب تک جنوبی افریقہ کیخلاف اس کے ہوم گراؤنڈز پر کوئی ٹیسٹ سیریز اپنے نام نہیں کرسکی

گزشتہ 11 سال کے دوران پاکستان نے پروٹیز سرزمین پر کوئی ٹیسٹ بھی نہیں جیتا ہے ،

کیپ ٹاؤن میں پاکستان کا ریکارڈ بھی کچھ اچھا نہیں

گراؤنڈ پر دونوں ٹیموں کے درمیان تین ٹیسٹ سیریز ہوئیں اور تینوں میں جنوبی افریقہ نے پاکستان کو شکست دی

قومی ٹیم کے پاس جنوبی افریقہ کو شکست دینے اور ایک دہائی پرانی ناکامی کی روایت کو توڑنے کا سنہری موقع ہے۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.