بلوچستان ،خشک سالی ، 1717885 افراد ، بھیڑ بکریوں سمیت 357093 دیگر مال مویشی متاثر

0

نیوز ڈیسک
بلوچستان میں قحط سالی 21ویں صدی کے اوائل سے مختصر تعطل کے ساتھ جاری ہے

لوگوں کی معیشت کا انحصار زراعت اور مال مویشی پالنا ہے جو کہ حالیہ خشک سالی کی وجہ سے شدید متاثر ہوئے ہیں

خشک سالی سے متاثرہ دیہاتوں اور اضلاع کو نہ آفت زدہ قرار دیا گیا ہے اور نہ ہی حکومت بلوچستان ایسی نوبت آنے دے گی

حکومت بلوچستان متاثرین کی بحالی کیلئے تمام دستیاب وسائل بروئے کار لارہی ہے

بلوچستان میں قحط سالی سے متاثرہ خاندانوں کی تکلیف ،کرب اور نقصانات کابخوبی احساس سے خشک سالی سے متاثرہ خاندانوں کی بھرپور مدد کی جائے گی

جلد وہ خشک سالی سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کرکے خشک سالی کے اثرات اور نقصانات کا اندازہ لگا کر نقصانات کا ازالہ اور متاثرین کو درپیش مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کیلئے اقدامات

کوئٹہ :صوبائی وزیر داخلہ ضیاء لانگو پی ڈی ایم اے کے شعبوں کااور سامان کامعائنہ کررہے ہیں

اٹھائے جائیں گے

صوبائی وزیرداخلہ پی ڈی ایم اے میر ضیاء اللہ لانگوکا پی ٹی ایم اے ہیڈ آفس کی دورہ کے موقع پر افسران سے خطاب

ڈائریکٹر جنرل پی ڈی ایم اے محمد طارق ڈائریکٹر ریلیف عطااللہ ڈائریکٹر انتظامیہ فیصل نسیم اسٹنٹ ڈائریکٹر ایڈمن اینڈ رلیف فیصل و دیگر حکام موجود تھے –

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,717

صوبائی وزیرداخلہ و پی ڈی ایم اے کو فرداً فرداً محکمہ کے مختلف شعبوں اور حصوں کا دورہ بھی کرایا گیا، انہیں محکمہ کے استعداد کار سے تفصیلی آگاہ کیا گیا-

صوبائی وزیر کو ڈی جی پی ڈی ایم اے نے محکمہ کے کام، متاثرہ اضلاع میں خشک سالی متاثرین کی امداد و بحالی اور محکمہ کو درپیش مسائل پر بریفنگ دی

صوبہ میں خشک سالی سے 20 اضلاع متاثر ہوئے ہیں جن میں سے صرف 14 زیادہ متاثرہ اضلاع کو زیادہ سے زیادہ امداد اور ریلیف پہنچایا جارہا ہے

امدادی سامان میں اشیائے خورد و نوش، سردی سے بچنے کے لئے کمبل، ٹینٹ، ادویات، مال مویشیوں کے لئے چارہ، پانی وغیرہ شامل ہیں-

ڈی جی پی ڈی ایم اے نے صوبائی وزیر کو محکمہ کو درپیش مسائل اور وسائل کی کمی سے بھی آگاہ کیا

صوبائی وزیر نے اس عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ متاثرین کی امداد و بحالی اور محکمہ کو درپیش مسائل کے حل کے لیے صوبائی اور وفاقی حکومتوں سے بات چیت کریں گے-

بذات خود صوبائی حکومت اور مرکزی حکومت سے متاثرین کی امداد و بحالی کے لیے مزید وسائل کی فراہمی کا مطالبہ کرونگا

انھوں نے کہا کہ چند دنوں بعداس حوالے سے مرکزی سطح پر ایک اعلی سطحی اجلاس طلب کیا گیا ہے جس میں شرکت کرتے ہوئے قحط سالی اور اس کے متاثرین کو درپیش مسائل پر زور طریقے سے اجلاس کے روبرو پیش کریں گے اور وفاقی حکومت سے اضافی فنڈ اور وسائل کی فراہمی کا مطالبہ کریں گے ،صوبائی وزیر ضاء لانگو

صوبائی وزیر نے کہا کہ پی ڈی ایم اے اپنے فرائض دیانتداری اور خوش اسلوبی سے انجام دے رہی ہے، پی ڈی ایم اے کا متاثرین کی مدد کرنے اور انہیں ریلیف پہنچانے کے لیے کاوشیں اور کردار قابل ستائش ہے
جہاں بھی پی ڈی ایم اے کی جانب سے کسی بھی قسم کی غفلت یا بد دیانتی ثابت ہوئی تو کسی بھی قسم کی رعایت نہیں برتی جائے گی

متاثرین کی امداد اور بحالی، ان کی جان و مال، صحت کے تحفظ کے حوالے سے کسی بھی قسم کا سمجھوتا نہیں کریں گے

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.