کشمیر کی حیثیت ہمارے لیے وہی ہے جیسے پاکستان کے لیے ہیں :ترک صدر

مومنوں کے درمیان کوئی بھی سرحد فاصلے پیدا نہیں کرسکتا

0

عبدالکریم
ترکی کے صدر رجب طیب اردگان نے پاکستان کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان آکر وہ خود کو اجنبی محسوس نہیں کرتے وہ پاکستان کو اپنا دوسرا گھر سمجھتے ہیں ترک صدر نے کہا کہ پاکستان اور ترکی کی تعلقات قابل رشک ہے ان کا مزید کہنا تھا کہ ترکی کی آزادی میں برصغیر کے مسلمانوں کے جذبے اور کردار کو ترک عوام کبھی فراموش نہیں کرسکتے ۔
رجب طیب اردگان کا مزید کہنا پاکستان کا دکھ ہمارا دکھ درد ہے اور پاکستان کی خوشی ہماری خوشی ہے ترکی پاکستان کی ماضی کی طرح مستقبل میں بھی مدد جاری رکھے گا اور پاکستان کو ایف اے ٹی ایف میں بھرپور تعاون کا یقین دلایا

رجب طیب اردگان نے کشمیر کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ترکی کیلئے کشمیر کی حیثیت وہی ہے جو پاکستان کیلئے ہیں ان کے مطابق مومنوں کے درمیان کوئی بھی سرحد فاصلے پیدا نہیں کرسکتا ترکی نے چالیس لاکھ شامی مہاجرین کو پناہ دی ہے اور شام کے شمال میں جاری کردہ آپریشن میں پاکستان نے ترکی کی بہت مدد کی پاکستان نے دہشت گردی ختم کرنے کیلئے ترکی کا بھرپور ساتھ دیا انہوں نے مزید کہا کہ ہماری دوستی مفاد کی نہیں محبت سے پراون چڑھی۔

ترک صدر نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور اسرائیلی منصوبے کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ یہ منصوبہ امن منصوبہ نہیں ہے بلکہ تباہی کا منصوبہ ہے اور القدس پر قبضے کا ایک چال ہے
ترک صدر نے پاکستانی عوام کا پرتپاک استقبال پر شکریہ اداء کرتے ہوئے کہا کہ میں تمام پاکستانیوں کو سلام پیش کرتا ہوں

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: