کون72 گھنٹوں تک ٹرک روک کر بھتہ لیتا ہے ۔۔۔۔؟؟؟

0

کوئٹہ : ویب رپورٹر

بلوچستان گڈز ٹرک اونر زایسوسی ایشن (ر) کے قائد حاجی نور محمد شا ہوانی اور دیکر عہدیداروں نے وزیراعلیٰ بلوچستان ،وزیر داخلہ بلوچستان، چیف سیکرٹری ، سیکرٹری داخلہ، آئی جی پولیس،کلکٹر کسٹم بلوچستان ودیگر اعلیٰ کی توجہ بلوچستان سے دوسرے صوبوں کیلئے سمگلنگ بغیر ٹیکس کا کم ٹیکس جمع کرنیوالوں کی جانب سے مبذول کر اتے ہوئے کہا کہ بلوچستان سے غیر ملکی سامان کی ترسیل کی90 فیصد اسمگل کیا جا رہا ہے جو حکومت ٹرانسپورٹ اور قانونی طریقے سے کام کرنیوالے تاجر کو نقصان ہے

بلوچستان گڈز ٹرک اونر زایسوسی ایشن (ر) کے مرکزی سیکرٹری جعفر خان کاکڑ، حمید اللہ لانگو، حاجی اسما عیل لہڑی، حاجی روزی خان مندوخیل، حاجی باری داد کاکڑ، عبدالجبار اچکزئی، حاجی پیر محمد کاکڑ، حاجی عبدالخالق بنگلزئی، ملک نور خان کرد، سید صادق آغا، حاجی ابراہیم پرکانی، ماسٹر حاجی عنایت اللہ کاکڑ ویدگر نے گڈز ٹرانسپورٹروں نے کہا ہے کہ سب سے زیادہ نقصان تو اس میں حکومت کا ہے اور چمن تفتان کوئٹہ سے لے کر سندھ، پنجاب، خیبر پختونکوا تک کسٹم وانٹیلی جنس پولیس لیویز ودیگر سیکورٹی اداروں کے آفیسرز وسیاسی ور چند گڈز کمپنی مالکان کو آپس میں ملی بھگت ہے ۔

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,447

کسٹم حکام نے حکومتی خزانے کو جتنا نقصان دیا ہے کسی بھی ادارے نہیں دیا ہے اور چند گڈز کمپنی مالکان جو اپنی ذمہ داری سے غیر ملکی سامان منزل تک پہنچانے کی ذمہ داری پر مال لوڈ کر دیتے ہیں اور تاجر سے ایک بلٹی پر لاکھوں روپے وصول کر تے ہیں اور یہی گڈز کمپنی مالکان بلوچستان، سندھ، پنجاب اور خیبر پختونخوا یعنی تمام ناکوں گشت کرنے ولاوں کو بھتہ دے رہے ہیں

اس ناروا اقدام کی کوئی روک تھام نہیں اور قانونی طریقے سے سپلائی کرنے والوں کو شاہراہوں پر چیکنگ یا ڈاکومنٹس نامکمل جیسے حیلے بہانے بنا کر 24 سے72 گھنٹوں تک ٹرک روک بھتہ لینے پر مجبور کیا جا رہا ہے لیکن غیر قانونی افراد کے صرف ٹرک نمبر لکھ کر چھوڑ دیتے ہیں اور بلوچستان سے غیر قانونی طریقے سے غیر ملکی سامان کی روزانہ سینکڑوں گاڑیاں لوڈ ہو تے ہیں اور دن دھاڑے شاہراہوں پر سفر کر تے ہیں ۔

کوئی پو چھنے والا ہی نہیں اور اہلکاروں سے جب ہمارے ڈرائیور قانونی بحث ومباحثہ کر تے ہیں تو انہیں شدید طریقے سے زدکوب اور گالم گلوچ اور گاڑی کو بند کر نے کی دھمکیاں دیتے ہیں لیکن غیر قانونی طریقے سے غیر ملکی مال سپلائی کرنے والوں کیساتھ یہی اہلکار بااخلاق پیش ہو کر رخصت کر تے ہیں کیونکہ ان کے مال سپلائزر ان کو بھتہ دتے ہیں انہوں نے کہا کہ کسٹم کے محکمہ کے تمام افسران واہلکار کرپٹ ہیں اگر حکومت سمگلنگ کی روک تھام کسی او ر طریقے سے کر سکتے ہیں وبسم اللہ بلوچستان گڈز ٹرک اونرز ایسی ایشن بھر پور تعاون کرے گی اگر نہیں و پھر حکومت کو چا ہئے کہ وہ کسٹم کا محکمہ ہی ختم کر دیں۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.