پی ٹی آئی کا الیکشن میں دھاندلی اور نتائج کی تبدیلی کی جوڈیشل تحقیقات کا مطالبہ

0

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے 8 فروری کو ہونے والے الیکشن میں دھاندلی اور انتخابی نتائج کی تبدیلی پر عدالتی تحقیقات کا مطالبہ کر دیا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے وزیراعظم کے امیدوار عمر ایوب خان کا کہنا تھا کہا گیا کہ ہمارے پاس لوگ نہیں ہوں گے پولنگ ایجنٹس بھی نہیں ہوں گے، ہمیں عوام نے 3 کروڑ سے زائد ووٹ دیے جس پر تہہ دل سے ان کے شکر گزار ہیں۔

ان کا کہنا تھا الیکشن میں 180 نشستیں ہم جیتے ہیں جو ہمیں ملنی چاہئیں، پنجاب اور کراچی میں ہماری نشستیں چھینی گئیں، کراچی میں ایم کیو ایم نے ہماری 18 نشستیں چوری کیں جبکہ پشاور میں بھی ہمیں 7 سے 8 نشستوں پر ہروایا گیا، جو کچھ عوام کے ساتھ ہو رہا ہے اس دھاندلی کو مدر آف آل رگنگ ڈکلیئر کرتے ہیں۔

عمر ایوب خان کا کہنا تھا کمشنر راولپنڈی نے کہا 50 سے 60 ہزار ٹھپے لگائے گئے، جیتے ہوئے امیدواروں کو ہرایا گیا، ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ کمشنر لیاقت چٹھہ کے الزامات کی عدالتی تحقیقات کروائی جائیں، ہم چیف جسٹس پاکستان کے استعفے کا مطالبہ نہیں کرتے لیکن جن جن کا نام سابق کمشنر راولپنڈی نے لیا وہ خود انکوائری سے الگ ہو جائیں۔

ایک سوال کے جواب میں عمر ایوب خان کا کہنا تھا شکر گزار ہوں بانی پی ٹی آئی کا کہ انہوں نے وزیراعظم کے لیے مجھے منتخب کیا، وزیراعظم کے لیے جیت ہماری ہو گی، مرکز اور پنجاب میں بھی تحریک انصاف حکومت بنائے گی۔

رہنما تحریک انصاف کا کہنا تھا جیتنے کے بعد ہمارا ارادہ ہے کہ بانی پی ٹی آئی اور بشریٰ بی بی کو بازیاب کرائیں گے۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.