عبادت کی آڑ میں 80یہودی آباد کاروں کے قبلہ اول پردھاوے،بے حرمتی کا ارتکاب کیا

0

فلسطین کے مقبوضہ بیت المقدس میں مسجد اقصی میں یہودی آباد کاروں کے دھاوے اور مقدس مقام کی مجرمانہ بے حرمتی کا سلسلہ جاری ہے۔

مقبوضہ بیت المقدس
نیوز ڈیسک

گذشتہ روز80 یہودی آباد کار اور اسرائیلی فوجی پولیس کی فول پروف سیکیورٹی میں مسجد اقصی میں داخل ہوئے اور قبلہ اول میں گھس کرنام نہاد مذہبی رسومات کی ادائیگی کی آڑ میں مقدس مقام کی بے حرمتی کی۔

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,727

فلسطینی میڈیا رپورٹس کے مطابق اسرائیلی فوج نے مسجد الاقصی میں گزشتہ روز علی الصباح80 یہودی آبادکاروں نے اسرائیلی پولیس کی فول پروف سیکیورٹی میں نے قبلہ اول کی بے حرمتی کا ارتکاب کیا۔ جبکہ دن کے آخری حصے میں مزید 35 صہیونیوں نے مسجد اقصی کی بے حرمتی کی۔

مسجد اقصی کے دروازوں کے باہر تعینات کی گئی اسرائیلیپولیس نے فلسطینی نمازیوں کے ساتھ بدسلوکی کی اور ان کی شناخت پریڈ کے ساتھ انہیں قبلہ اول میں عبادت کیلئے داخل ہونے سے روکنے کی کوشش کرتے رہے۔

صہیونی فوج کی جانب سے روکنے پر فلسطینی مشتعل ہوگئے اور انہوں نے صہیونی فوج اور پولیس کی غنڈہ گردی کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

عینی شاہدین کے مطابق یہودی آباد کاروں کی بڑی تعداد مراکشی دروازے کے راستے مسجد اقصی میں داخل ہوئی۔ اس موقع پر اسرائیلی فوج اور پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی تھی۔ادھراسرائیلی فوج نے گزشتہ روزبیت المقدس میں وادی الجوز کے مقام پر تلاشی کے دوران ایک مقامی صحافی مصطفی الخاروف کو حراست میں لے لیا۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.