ژوب میں 12سال سے جاری تعمیراتی کام نامکمل 

0

متاثرین میرعلی خیل روڈ و معتبرین مندوخیل قبائل ملک احسان الحق مندوخیل پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میرعلی خیل روڈ کی تعمیر سال2005 ء میں شروع ہوئی جو تاحال جاری ہے شاہراہ کی تعمیر نہ ہونے کے برابرہے

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,727

ویب رپورٹر

انہوں نے زیر پوائنٹ سے تسلسل کے ساتھ شاہراہ کی تعمیر کو یقینی بنانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ تعمیراتی کمپنی جگہ جگہ ٹکڑوں کی شکل میں روڈتعمیر کر رہی ہے ۔

میر علی خیل شاہراہ انتہائی کم مسافت کی حامل ہے جس کی خیبر پختونخوا کی ٹانک تک لمبائی ایک سو ایک کلومیٹر بنتی ہے متعلقہ کمپنی منافع کی حامل کٹنگ و فیلنگ پر توجہ دے رہی ہے۔

انہوں نے حکام بالا سے بل کی ادائیگی کو بلیک ٹاپ سے مشروط کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ متعلقہ کمپنی نے میرعلی خیل شاہراہ مکمل کرنے کی بجائے مشینری کو کسی اور منصوبے کو منتقل کی ہے ۔

شاہراہ کی تعمیر میں تاخیر پلوں کی نامکمل تعمیر اور ڈائیورشن کی وجہ سے علاقے میں گردغبارچھائی رہتی ہے جس کے باعث آئے روز حادثات رونما ہو رہے ہیں شاہراہ کی تعمیر میں تاخیر کی وجہ سے درجنوں دیہات کے لوگ سخت مشکلات سے دوچار ہے ۔

انہوں نے وزیر اعلیٰ بلوچستان صوبائی وزراء ڈاکٹر حامد خان شیخ جعفر خان مندوخیل چیف سیکرٹری کمشنر ژوب ڈویژن چیرمین بی ڈی اے سے اپیل کی کہ شاہراہ کی تعمیر میں تاخیر کا نوٹس لیا جائے انہوں نے کہا کہ اگر یہی صورتحال برقرار رہی تو قبائل احتجاج پر مجبور ہونگے ۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.