کوئٹہ ہاوسنگ سوسائٹی کیس: عوام سے لاکھوں لوٹنے والے کی پلی بارگین منظور

ویب رپورٹر 

کوئٹہ کی احتساب عدالت نے جعلی ہاﺅسنگ سوسائٹی کے نام پر لوگوں کو لوٹنے والے ملزم کی پلی بارگین کی درخواست منظور کر لی۔ پلی بارگین کے تحت ملنے والی رقم  متاثرین میں تقسیم کی جائے گی۔

قومی احتساب بیورو (نیب) کے ترجمان کے مطابق احتساب عدالت کوئٹہ کے جج منور شاہوانی نے جعلی ہاﺅسنگ سوسائٹی کے نام پر لوگوں کو لوٹنے والے ملزم سجاد علی شاہ کی پلی بارگین کی درخواست منظور کرلی ہے۔ پلی بارگین کے تحت ملزم 52 لاکھ 52 ہزار 600 روپے واپس کرے گا۔

نیب ترجمان نے اس بات کی وضاحت نہیں کی کہ ملزم نے عوام سے کتنی رقم بٹوری ہے اور یہ رقم اس کے برابر ہے یا اس سے کم ہے۔

احتساب عدالت نے نیب کے قانون کے مطابق ملزم سجاد علی شاہ کو سزا بھی سنا دی ہے جس کے تحت ملزم 10 سال کے لئے کوئی بھی سرکاری عہدہ، الیکشن لڑنے کے ساتھ ساتھ بینک سے قرض بھی حاصل نہیں کر سکتا۔

ترجمان کے مطابق ملزم سجاد علی شاہ نے لوگوں سے جعلی ہاﺅسنگ اسکیم کے نام پر لاکھوں روپے ہڑپ کر لئے جس پر متاثرین نے نیب بلوچستان سے رجوع کیا۔ نیب نے تحقیقات مکمل کر کے احتساب عدالت میں ریفرنس دائر کیا۔

کافی ثبوتوں کی روشنی میں ملزم نے تمام لوٹی گئی رقم کی واپسی کے لئے پلی بارگین کی درخواست دی جسے عدالت نے منظور کر لیا ہے۔ قانونی تقاضوں کو پورا کرنے کے بعد تمام رقم متاثرین کے حوالے کر دی جائے گی۔

https://pagead2.googlesyndication.com/pagead/js/adsbygoogle.js

اپنا تبصرہ بھیجیں