کوئٹہ ،شہر کی خوبصورت کیلئے نصب گھوڑے کا مجسمہ گاڑی کی ٹکر سے زمین بوس

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

رپورٹ۔۔۔۔۔ مدثر محمود

سابق بلدیاتی دور میں بلوچستان کے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ کی خوبصوتی میں اضافے کیلئے شہر کے چوراہوں پر خوبصورت مجسمے نصب کیے تھے جن میں گھوڑے ،شکرا اور دیگر شامل ہیں جو شہر کے مختلف شاہراہوں پر نصب کیے گئے تھے

کمشنر آفس کوئٹہ کے سامنے بھی ایک گھوڑے کا مجسمہ نصب کیا گیا تھا جسے رات کی تاریکی میں کسی گاڑی والے نے ٹکر مار کر زمین بوس کردیا جو آج بھی سڑک کے کنارے پڑا ہے

اس ِحوالے سے کوئٹہ کے ایک شہری نے بلوچستان 24 ڈاٹ کام سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسا لگتا ہے کہ کوئٹہ لاوارث شہر ہے کرپشن کے باعث منصوبے سالوں سال چلتے ہیں اور اگر بروقت مکمل ہوجائیں تو تو انکی نگرانی نہیں ہوپاتی مغربی ممالک میں ہر منصوبہ کم از کم سو سال کیلئے بنتا ہے لیکن ہمارے ہاں منصوبہ بندی کا فقدان ہے

کوئٹہ کے ایڈمنسٹریٹر فاروق لانگو نے اس حوالے سے کوئٹہ کے بنکوں اور دیگر اداروں کے تعاون سے اس کام کو دوبارہ سرانجام اٹھانے کا بیڑا اٹھایا ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ چوراہوں کی خوبصورتی کیلئے ایسے ڈیزائن ترتیب دئے جائیں جس سے انکو نقصان پہنچے کا خدشہ نہ ہو کوئٹہ بلوچستان کا چہرہ ہے اسکی خوبصورتی اور تحفظ کا احساس گویا پورے صوبے کا احساس ہے وزیر اعلی بلوچستان گڈ گورننس کے سب سے بڑا داعی ہے اس جانب انکی توجہ درکار ہے

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: