لبنانی پروڈیو سر گرفتار

0

لبنانی پولیس نے اسرائیل کیلئے جاسوسی کے الزام میں لبنانی پروڈیوسرکو گرفتارکرلیا
صہیونی خفیہ اداروں کی طرف سے جو ٹاسک دیا گیا تھا اسے مکمل کیا ہے،عیتانی کا دوران تفتیش اعتراف

بیروت
ویب ڈیسک 

لبنانی پولیس نے ایک مصنف اور فلم پروڈیوسر زیاد احمد عیتانی کو اسرائیل سے رابطہ رکھنے اور دشمن ریاست کے لیے جاسوسی کے الزام میں گرفتار کیا ہے۔

فلسطینی میڈیا رپورٹس کے مطابق پولیس نے صہیونی ریاست کے ساتھ رابطہ رکھنے کے شبے میں فلم پروڈیوسر زیاد کی اندرون اور بیرون ملک سرگرمیوں پر نظر رکھی ہوئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,717

بیروت کے سیکیورٹی ڈاریکٹوریٹ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ عیتانی نے دوران تفتیش بتایا ہے کہ اسے صہیونی خفیہ اداروں کی طرف سے جو ٹاسک دیا گیا تھا اس نے وہ مکمل کیا ہے۔

اس میں لبنان میں اہم سیاسی اور حکومتی شخصیات کے بارے میں اسرائیل کو معلومات فراہم کرنے اور اسرائیلی ریاست کے ساتھ تعلقات استوار کرنے کی راہ ہموار کرنے کی ذمہ داری سونپی گئی تھی۔

عیتانی نے اعتراف کیا ہے کہ اس نے حالیہ دو ہفتوں کیدوران لبنان میں آنے والی تبدیلیوں کے بارے میں بھی صہیونی خفیہ اداروں کو معلومات فراہم کی تھیں۔

عیتانی کے خاندانی ذرائع کا کہنا ہے کہ جمعہ کو سیکیورٹی فورسز نے عیتانی اور اس کی اہلیہ کو بیروت میں قائم ان کی رہائش گاہ سے حراست میں لیا تھا جس کے بعد دونوں سے پوچھ تاچھ کی گئی ہے۔

خبر رساں اداریاناطولیہ کے مطابق عیتانی نے اعتراف کیا ہے کہ اس نے غیرملکی پاسپورٹ پر آنے والے اسرائیلی انٹیلی جنس کے ایک اہلکار سے رقم بھی وصول کی تھی۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.