بلوچستان حکومت کا بلدیاتی انتخابات میں تاخیر اور لوکل گورنمنٹ ایکٹ میں ترامیم پر غور

0

ویب ڈیسک

الیکشن کمیشن نے حلقہ بندیوں کا عمل شروع کردیا ہے جس کے تناظر میں بلوچستان لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2010ء میں ترامیم اور دشواریوں کا سامنا ہے جبکہ صوبے کے اٹھارہ اضلاع میں قحط سالی کے سبب ایمرجنسی نافذ ہے لہذا لوکل باڈیز کے انتخابات کا بروقت انعقاد ممکن نہیں ہوسکتا

صوبائی الیکشن کمیشن کو مراسلہ بھیجا جائے گا جس کے ذریعہ سے الیکشن کمیشن کو تمام عوامل سے آگاہ کیا جائے گا تاکہ ایکٹ میں مجوزہ ترامیم اور ایمرجنسی کے خاتمے تک بلدیاتی انتخابات کے انعقاد کی مدت کو بڑھایا جائے

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی زیرصدارت لوکل گورنمنٹ ایکٹ میں اصلاحات اور ترامیم سے متعلق قائم کمیٹی کا اجلاس

سیکریٹری لوکل گورنمنٹ قمبر دشتی نے اجلاس کو بلوچستان لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2010ء میں مجوزہ ترامیم، نئے وارڈز اور یونین کونسلزکے قیام، گرانٹس کی تقسیم، الیکشن کمیشن کے زیراہتمام ہونے والی نئی حلقہ بندیوں سمیت مختلف امور پر تفصیلی بریفنگ دی،

یہ بھی پڑھیں
1 of 8,759

اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ وسائل کی تقسیم کے ساتھ ساتھ مختلف شہروں میں بڑھتے ہوئے ترقیاتی عمل کومدنظر رکھتے ہوئے میونسپل کمیٹیوں اور کارپوریشن کے قیام کو زیرغور لایا جائے، ،

چونکہ ملک کے دیگر صوبوں میں لوکل گورنمنٹ ایکٹ میں ترامیم پر کام جاری ہے اور ممکن ہے کہ ایک ایسے نظام کا قیام عمل میں لایا جائے جس سے تمام صوبے متفق ہوں، اجلاس میں بلدیاتی انتخابات کے انعقاد کو 120دن کی بجائے 180دن تک کرائے جانے پر غور کیا گیا تاکہ بلوچستان لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2010ء میں باہمی مشاورت اور جامع طریقے سے ترامیم کو یقینی بنایا جاسکے۔

اجلاس میں یونین کونسلوں کی ازسرنو تشکیل میں لوکل کونسل گرانٹس کی تقسیم کے طریقہ کار میں مجوزہ ترامیم کا بھی جائزہ لیا گیا۔

وزیراعلیٰ جام کمال نے کہا کہ حکومت بلدیاتی اداروں کو مالی وتنظیمی اختیارات دے کر انہیں مزید مستحکم اور بااختیار بنانا چاہتی ہے تاکہ عوامی مسائل ان کی دہلیز پر ہی حل ہوسکیں۔ بلوچستان لوکل گورنمنٹ ایکٹ میں حکومت اور اپوزیشن مل کر باہمی مشاورت سے ترامیم لائیں گے اور اس سلسلے میں پائے جانے والے تمام ابہام کا خاتمہ کیا جائے گا۔

اجلاس میں صوبائی وزراء نوابزادہ طارق خان مگسی، سردار صالح محمد بھوتانی، میر نصیب اللہ مری، عبدالخالق ہزارہ، میر عارف جان محمد حسنی، اراکین صوبائی اسمبلی نوابزادہ گہرام بگٹی،میر جان محمد جمالی، قائد حزب اختلاف ملک سکندر خان ایڈووکیٹ، رکن صوبائی اسمبلی نصراللہ زیرے، ثناء اللہ بلوچ، مختلف محکموں کے سیکریٹری اور دیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.